ShareThis

Tuesday, May 18, 2010

فکری، ذہنی اور قلمی دہشت گردی

اطلاعات کے مطابق دن 20 مئی کو نامعلوم کافروں نے بین الاقوامی سطح پر"ڈرا محمدڈے" منانے کا اعلان کیا ہے اس سلسلے میں ایک ویب سائٹ بھی اسی نام سے بنائی گئی ہے ، جس میں باقاعدہ ایک مقابلے کا اعلان کیا گیا ہے اور حضور پاک  کی شان میں گستاخی کے لیئے کارٹون بنانے کی دعوت دی گئی ہے ، ساتھ ہی کچھ انعام وغیرہ اوراسپیشل گیلریز کا بھی لالچ دیا گیا ہے ۔ یہ بے حیائی اور خباثت کا مظاہرہ  نامعلوم کافر مسلمانوں کے جذبات سے کھیلنے کے لیئےانجام دے رہے ہیں۔
انبیاء کی شان میں گستاخی، فکری، ذہنی اور قلمی دہشت گردی ہے، کفار بین المذاہبی ہم آہنگی اور رواداری کی دھجیاں بکھیر رہے ہیں۔ اور کوئی انہیں پوچھنے والا نہیں، ایک مسلمان سب کچھ برداشت کرسکتا ہے مگر اپنے پیارے نبی کی شان میں گستاخی برداشت نہیں کرسکتا۔ہم مسلمان اس حرکت کو بالکل بھی گوارہ نہیں  کر سکتے  کہ ہمارے پیارے نبی کی شان میں گستاخی کی جائے۔ آپ بتائیں کہ اس سلسلے میں ہمارا احتجاج کا موثر طریقہ کیا ہوسکتا ہے؟

3 comments:

  1. کچھ لوگوں‌کے بقول خاموشی اختیار کی جائے اور کچھ انہیں‌جواب دینا چاہتے ہیں‌۔
    ہم پاکستانی چونکہ اردو بولنے والے ہیں اس لیے ہمارا احتجاج یا مختلف فورمز یا بلاگز پر تحریریں ان پر اثر نہیں‌کرسکتیں
    البتہ انگریزی دان طبقہ شاید اپنی آواز پہنچا سکے
    اس کا دوسرا جواب یہ ہے کہ ہم پاکستانی بھی فیس بک کی طرح کی ایک سوشل نیٹ ورکنگ کی سائیٹ بنائیں
    اور سب لوگ اسے استعمال کریں

    ReplyDelete
  2. Assalam o alaikum,
    It has been seen that many people are boycotting by deactivating their Facebook accounts, but trust me backing off for a day won’t do anything. All we need is to indulge ourselves in intellectual talks and make them realize that what they are doing in the name of their so called freedom of speech is completely immoral and unethical. We have to show our Unity this time. All Muslim Brothers and Sisters out there, kindly join War Camp 20th May Page on Facebook, and be a member of War Camp!
    http://www.facebook.com/pages/War-Camp-20th-May/124968490862046?v=info#!/pages/War-Camp-20th-May/124968490862046

    ReplyDelete
  3. یہ ویب ہیک کر لی گئی ہے

    ہمیں چاہیئے کہ مسلمان ہونے کے ناطے اپنے آپ کو فیس بک سے الگ کر لیں اپنا اکاؤنٹ بند کر لیں

    اپنی دوستی اپنے ان مسلمان بھائیوں کے لئے چھوڑ دیں جو پیغمبر محمدصلی اللہ علیہ وسلم کے ماننے والے ہیں
    یا ان لوگوں کے لئے جو محمدصلی اللہ علیہ وسلم کے نام کی بھی بے حرمتی نہیں کر سکتے

    ایک حدیث کا مفہوم ہے
    قیامت میں ہر شخص اس کے ساتھ ہوگا جس کا ساتھ وہ دنیا میں رکھتا تھا
    کیا ہم ان خبیث لوگوں کے ساتھ اب بھی ہیں
    بس ایونٹ چلا جائے ہم پھر فیس بک پر
    کیا یہی محمدصلی اللہ علیہ وسلم سے محبت ہے

    ہم اس کے بدلے دوسرے ذرائع کیوں استعمال نہیں کر لیتے
    تا کہ بار بار ایسا عمل کرنے کی نا سوچ سکیں یہ غیر مسلم

    ورنہ ہر سال ایسا ہی ہو گا
    اور ہم 5 سے 10 دن کے لئے فیس بک بند کر کے محمدصلی اللہ علیہ وسلم کی محبت کا دم بھرتے رہیں گے

    کیا ہم محمدصلی اللہ علیہ وسلم کے ساتھ ہیں یا محمدصلی اللہ علیہ وسلم کی توہین کرنے والوں کے ساتھ؟
    گر ہم فیس بک ہی چاہتے ہیں تو پاکستانی فیس بک استعمال کر سکتے ہیں

    www.pakfacebook.com

    ReplyDelete