ShareThis

Tuesday, May 26, 2009

پاکستانی ریلوے کے اہلکاروں کا ٹکٹوں میں کرپشن

پاکستان ریلوے کےٹکٹ گھر کےاہلکارٹکٹوں پر زیادہ پیسے لے کر خوب حرام کما رہے ہیں۔ میں16مئی کو بزریعہ خیبرمیل حیدرآباد سے کراچی تک کا سفر کیا ۔حیدرآباد اسٹیشن کےٹکٹ گھر کےاہلکارسے میں نے ٹکٹ 160 روپے میں لیا جبکہ اصل قیمت پراسٹامپ لگا کر اصل قیمت کو چھپا دیا تا کہ خوب حرام کما  سکے۔ تمام مسافروں سے ٹکٹ کی قیمت 160روپے وصول کی گئی۔ اور حیرت کی بات یہ ہے کہ دوران سفر ٹکٹ کو کسی نےچیک بھی نہیں کیا۔ حیدرآباد سے ڈرگ روڈ اسٹیشن کراچی کا تھا جبکہ میں نے سفرحیدرآباد سےکینٹ اسٹیشن کراچی تک کا سفرکیا۔ اور کسی نے مجھےنہیں پکڑا۔


پاکستانی ریلوے کے اہلکاروں کا ٹکٹوں میں کرپشن

پاکستان ریلوے کےٹکٹ گھر کےاہلکارٹکٹوں پر زیادہ پیسے لے کر خوب حرام کما رہے ہیں۔ میں16مئی کو بزریعہ خیبرمیل حیدرآباد سے کراچی تک کا سفر کیا ۔حیدرآباد اسٹیشن کےٹکٹ گھر کےاہلکارسے میں نے ٹکٹ 160 روپے میں لیا جبکہ اصل قیمت پراسٹامپ لگا کر اصل قیمت کو چھپا دیا تا کہ خوب حرام کما  سکے۔ تمام مسافروں سے ٹکٹ کی قیمت 160روپے وصول کی گئی۔ اور حیرت کی بات یہ ہے کہ دوران سفر ٹکٹ کو کسی نےچیک بھی نہیں کیا۔ حیدرآباد سے ڈرگ روڈ اسٹیشن کراچی کا تھا جبکہ میں نے سفرحیدرآباد سےکینٹ اسٹیشن کراچی تک کا سفرکیا۔ اور کسی نے مجھےنہیں پکڑا۔


Sunday, May 24, 2009

مالاکنڈ سے سندھ میں آنے والوں‌ کی حقیقت


متاثرین کے بھیس میں سندھ میں لینڈمافیا ،ڈرگ مافیا اور اسلحہ سپلائیرمافیا نے اپنی دوکان لگانے کی سازش کر رہی ہے۔

مالاکنڈ سے سندھ میں آنے والوں‌ کی حقیقت

۔ مالاکنڈ سے سندھ میں آنے والے فوجی آپریشن کے متاثرین نہیں ہیں بلکہ وہ ایسے طالبان ہیں جنہوں نے داڑھیاں منڈھوا کر بھیس بدل لیا ہے اور فرار ہوکر سندھ پہنچ رہے ہیں۔ اور خدشہ ہے کہ طالبان اور القاعدہ اپنا مرکز سرحد سے سندھ منتقل کر رہے ہیں


۔ افغانیوں کو مالاکنڈ کے متاثرین کے بھیس میں لاکرخالی زمینوں پر جھگیوں میں بساناہے اور پھر آہستہ آہستہ اس پر جھگی کو پکے گھر میں تبدیل کرنا ہے۔


Sunday, May 17, 2009

ایس ایم ایس کے ذریعے متاثرین مالاکنڈ کی مدد

متاثرہ علاقوں سے نقل مکانی کر کے آنے والے افراد کو ملک کے مختلف حصوں میں جگہ دینے کے لئے’’وزیرِ اعظم خصوصی فنڈ برائے متاثرین دہشت گردی‘‘ قائم کیا گیا ہے۔پاکستان ٹیلی کمیونیکیشن اتھارٹی(پی ٹی اے) کے مطابق سیلولر موبائل انڈسٹری کے تعاون کے ساتھ متاثرین کی امداد کے لئے 1199 ایس ایم ایس سروس کا آغاز کر دیا ہے۔ اس سروس کے ذریعے تمام موبائل آپریٹرز کے صارفین FUNDلکھ کر 1199پر ایس ایم ایس بھیج سکیں گے۔ ہر ایس ایم ایس پر 10/-روپے کی کٹوتی ہو گی جبکہ اکٹھی کی گئی رقم کو’’وزیرِ اعظم خصوصی فنڈ برائے متاثرین دہشت گردی‘‘ میں جمع کروا دیا جائے گا۔ زندگی کے ہر شعبے سے تعلق رکھنے والے افراد 1199 پر ایس ایم ایس بھیج کر ’’وزیرِ اعظم خصوصی فنڈ برائے متاثرین دہشت گردی‘‘ کے لئے مالی معاونت کر سکتے ہیں تاکہ متاثرین کی مدد کی جا سکے۔

Thursday, May 14, 2009

ہائے رے بجلی، عوام کو دن میں چین نہ رات میں سکون

ملک بھر میں بڑھتی ہوئی گرمی کے ساتھ بجلی کی لوڈ شیڈنگ میں اضافے نے عوام کو دوہرے عذاب میں مبتلا کردیا ہے ۔کراچی میں شہریوں کو بجلی کے بدترین بحران کا سامنا ہے۔ذرائع کے مطابق کر اچی الیکٹرک سپلائی کمپنی کو پانچ سو میگا واٹ بجلی کی کمی کا سامنا ہے جس کے باعث لوڈشیڈنگ کا دورانیہ آٹھ سے دس گھنٹے تک پہنچ گیا ہے ۔ دوسری جانب شہر میں صنعتی اور تجارتی سرگرمیاں بھی بری طرح متاثر ہیں۔بجلی کی آنکھ مچولی سے فرسودہ تنصیبات کو بھی نقصان پہنچ رہا ہے اور لائین ٹرپ ہونے کی شکایات عام ہیں۔لوڈ شیڈنگ کے باعث انٹر میڈیٹ کا امتحان دینے والے طالب علم خاص طور پر شدید پریشان ہیں ۔ شہریوں نے حکومت سے کے ای ایس سی انتظامیہ کی بے حسی اور ناقص کارکردگی کا سخت نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔لاہور کی صورت حال بھی کراچی سے زیادہ مختلف نہیں ہے جہاں آٹھ سے دس گھنٹے کی غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ کے باعث شہریوں کو شہریوں کو نہ دن میں سکون ہے اور نہ رات میں چین ۔پشاور صوبہ سرحد کے مختلف علاقوں میں بھی لوڈشیڈنگ کے دورانیے میں اضافہ کر دیا گیا ہے۔ شہری علاقوں میں آٹھ گھنٹے اور دیہی علاقوں میں بارہ گھنٹے لوڈ شیڈنگ کی جارہی ہے جس سے معمولات زندگی بری طرح متاثر ہو رہے ہیں۔شہر کے کئی صنعتی یونٹ بند ہیں جبکہ لوگوں کو پینے کے پانی کی قلت کا بھی سامنا ہے

Saturday, May 9, 2009

میری ماں

وڈیو کا لنک

میں کبھی بتلاتا نہیں
پر اندھیرے سے ڈرتا ہوں میں ماں
یوں تو میں دکھلاتا نہیں
تیری پرواہ کرتا ہوں میں ماں
تجھے سب ہے پتہ
ہے نا ماں؟
تجھے سب ہے پتہ
میری ماں
بھیڑ میں یوں نہ چھوڑو مجھے
گھر لوٹ کے بھی آ نہ پاؤں ماں
بھیجنا اتنا دور مجھ کو تو
یاد بھی نہ تجھ کو آ پاؤں ماں
کیا اتنا برا ہوں میں ماں
کیا اتنا برا۔۔۔
میری ماں
جب بھی کبھی پاپا مجھے
جو زور سے جھولا جھلاتے ہیں ماں
میری نظر ڈھونڈے تجھے
سوچوں یہی تو آ کے تھامے گی ماں
ان سے میں یہ کہتا نہیں
پر میں سہم جاتا ہوں ماں
چہرے پہ آنے دیتا نہیں
دل ہی دل میں گھبراتا ہوں ماں
تجھے سب ہے پتہ
ہے نا ماں؟
تجھے سب ہے پتہ
میری ماں
میں کبھی بتلاتا نہیں
پر اندھیرے سے ڈرتا ہوں میں ماں
یوں تو میں دکھلاتا نہیں
تیری پرواہ کرتا ہوں میں ماں
تجھے سب ہے پتہ
ہے نا ماں؟
تجھے سب ہے پتہ
میری ماں

صدر اوباما کیلئے ہائی سیکورٹی موبائل فون تیار

امریکا کے صدر بارک اوباما کیلئے ہائی سیکورٹی بلیک بیری موبائل فون تیار کر لیا گیا جو جلد ہی ان کے حوالے کر دیا جائے گا۔

ذرائع کے مطابق امریکی قومی سیکورٹی ادارہ صدر بارک اوباما کیلئے ٹاپ سیکرٹ بلیک بیری 8830 تیار کروا رہا ہے جو تکمیل کے آخری مراحل طے کر رہا ہے۔
صدر کیلئے اس موبائل فون کی تیاری میں فیڈرل اسٹینڈرڈ کے مطابق سافٹ ویئر تیار کروایا گیا ہے جس کے ذریعہ صدر اوباما فون کالز ملانے کے ساتھ ٹیکسٹ پیغامات بھیج اور موصول کر سکیں گے۔ خصوصی بلیک بیری میں سیکور وائس پرسنل ڈیجیٹل اسسٹنٹ رکھی گئی ہے۔ اسی قسم کا ایک اورموبائل خاتون اول مچل اوباما کو دیا جائے گا

چار پاکستانی موبائل فون کمپنیوں کے تھری جی ٹیکنالوجی کے لائسنس کی بولی میں عدم شرکت کے فیصلہ کے بعد بین الاقوامی موبائل فون کمپنیوں کا دلچسپی کا اظہار

پاکستان میں موبائل فون سروس کی سہولت فراہم کرنے والی 5 کمپنیوں میں سے چار کمپنیوں کی طرف سے تھری جی ٹیکنالوجی کیلئے لائسنس کی فروخت پر تحفظات اور بولی میں عدم شرکت کے فیصلہ کے بعد بین الاقوامی موبائل فون کمپنیوں ”ووڈا فون، قطر ٹیلی کام، ملائیشیا ٹیلی کام، سنگ ٹیل سمیت متعدد کمپنیوں نے اس میں دلچسپی کا اظہار کرتے ہوئے پاکستان ٹیلی کام اتھارٹی سے رابطہ کر لیا۔ پی ٹی اے ذرائع نے جمعرات کو یہاں بتایا کہ وزارت انفارمیشن ٹیکنالوجی کی طرف سے رواں سال موبائل فون کے شعبہ میں جدید ٹیکنالوجی تھری جی کی نیلامی کے عزم کے بعد پاکستان میں موبائل فون سروس فراہم کرنے والی کمپنیوں موبی لنک، وارید ٹیلی کام، یو فون سمیت چائنہ موبائل کی طرف سے تھری جی کیلئے کمپنیوں کے پاس درکار سرمائے اور انفراسٹرکچر کی کمی اور مالی مشکلات کے سامنے کا موقف اختیار کیا ہے

Wednesday, May 6, 2009

موت کا بوسہ

اےآر وائی ڈیجیٹل کے مارننگ شو کی اینکر ڈاکٹرشائستہ واحدی نے  براہ راست ٹی وی پر کوبرا سانپ کا بوسہ کیا ۔


وڈیو کا لنک


-


 


 

Saturday, May 2, 2009

سندھ دھرتی ایک بار پھر دشمنوں کے نرغے میں

سندھ میں افغانستان سے لاکھوں افغان مہاجرین کوصوبہ سرحد کے پختونوں کے بھیس میں لاکرشاہ لطیف بھٹائی کی دھرتی پر قبضے کی سازش کی جارہی ہے۔ سندھ دھرتی ایک بار پھر دشمنوں کے نرغے میں ہے اور وہ ایک بار پھر سندھ کو خون میں نہلانے‘ دھرتی پر قبضہ جمانے اور مستقل باشندوں کو غلام بنانے کی تیاریاں کررہے ہیں‘ اس مقصد کیلئے افغان مہاجرین کی آڑ میں لاکھوں افراد کو لاکر سندھ کے شہروں اور قصبوں پر اسلحہ کے زور پر قبضہ کرنے کی بھرپور کوشش کی جارہی ہے۔


سندھ کی تاریخ گواہ ہے کہ اس نے ہمیشہ پیار محبت‘ امن‘ بھائی چارے اور احترام انسانیت کا درس دیا‘ مذہب اور قومیت کے امتیاز سے بالاتر ہوکر سب کو اپنے دامن میں پناہ دی لیکن امن و محبت اور بھائی چارے کا درس دینے والی سندھ دھرتی کو ہمیشہ غیروں نے لوٹا اور یہاں نفرت کے بیج ہوئے‘ سندھ کی تاریخ بتاتی ہے کہ 300 سال پہلے بھی افغانستان کے صوبے قندھار سے آنے والے مدد خان کے لشکر نے سندھ دھرتی کے قدیم شہر بدین پر وحشیانہ حملہ کیا تھا‘ گھڑ سوار حملہ آوروں نے بدین میں ظلم و بربریت کا بازار گرم کرتے ہوئے تمام مکانات کو آگ لگادی تھی‘ گھوڑوں کی ٹاپوں تلے پورے شہر کو تاراج اور تباہ و برباد کرکے رکھ دیا تھا‘ سندھ کے صوفی بزرگ حضرت عبدالرحیم گرہوڑی نے اسی وقت سندھ دھرتی کے باسیوں کو واضح الفاظ میں یہ بتادیا تھا کہ


جڈھیی کڈھیی سندھڑیی


تو کیی قندھاران دھوکو


یعنی ”سندھ پر جب بھی کوئی حملہ ہوا یا سندھ دھرتی کو کوئی نقصان پہنچا تو قندھار والوں ہی سے پہنچے گا“۔ ان کی یہ پیشگوئی آج بھی سندھ کی تاریخ میں رقم ہے۔ 300 سال قبل حضرت عبدالرحیم گرہوڑی نے جس خطرے کی طرف اشارہ کیا تھا وہ سامنے آرہا ہے اور ا ب ایک بار پھر وحشیانہ حملے اور ظلم و بربریت کی تاریخ دہرانے اور خون خرابے کی تیاری کی جارہی ہے۔