ShareThis

Wednesday, December 16, 2009

دودھ صحت کیلئے مفید ہے


  ہمارے گھر پر دودھ ہمشہ سے دودھ والا ہی دے کر جاتا تھا مگر اب ہم نے اسے ہٹا دیا ہے۔ اب میں خود دودھ ڈیری سے خرید کر لاتا ہوں ۔ پرسوں شام میں دودھ اور ناشتے کا سامان خریدنے کیلئے ڈیری پر گیا۔ میں نے دکاندار سے دودھ مانگا۔ دکاندارنے کہا کہ ابھی دکان پر دودھ نہیں آیاہے۔مگراتفاق سے دودھ کاسپلائردودھ کے تین ڈول لے دوکان پرپہنچ گیا۔جب  دودھ کے ڈول کے ڈھکن کھولے تو دودھ میں مری ہوئی مکھیاں اور مچھر، بھوسہ(چارہ) اورمختلف حشرات الارض تیر رہے تھے۔  دکاندار نے جالی دار کپڑے سے دودھ کو ایک دوسرے برتن میں چھانا تو اس جالی دارکپڑے پر مری ہوئی مکھیاں اور مچھر، بھوسہ(چارہ) اورمختلف حشرات الارض وافر مقدارمیں جمع ہو گئے ۔ دودھ کی یہ حالت دیکھ کر میرا جی متلی ہونے لگا ۔میں نے اس کو خریدنے سے معذرت چاہی ۔  اس دودھ کی تصاویر موبائل کیمرے کی مدد سے لی تھیں آپ بھی دیکھیے ۔





 


 


6 comments:

  1. اس دودھ کی حالت تو آپ نے دیکھی ، لیکن پتا نہیں‌ کہ ڈبے کی دودھ میں‌کیا کیا ہوتا ہوگا۔ اللہ ہم سب کی صحت کا خیال رکھیں‌ ہم اس کا خیا ل نہیں ‌رکھ سکتے۔

    ReplyDelete
  2. اس طرح بال کی کھال نکالیں گے تو بہت سی چیزوں سے رہ جائیں گے۔ ڈبے میں بند دودھ پر بھی تو کیسز چل رہے ہیں۔ کوئی حل نہیں ان باتوں کا۔

    ReplyDelete
  3. بہت درست لکھا ہے آپ نے دودھ صحت کے لیے مفید ہے ۔۔

    البتہ میری تو تصویر دیکھ کر ہی طبعیت عجیب ہورہی ہے ۔۔ آپ تو وہاں موجود تھے ۔

    ReplyDelete
  4. ارے فرحان آپ بھی کمال کرتے ہو پاکستانی قوم لکڑ ہضم پھتر ہضم قوم ہے ۔ کچھ بھی دے دو کھا لیتی ہے ۔ جہاں تک اس مکھی والے دودھ کا سوال ہے تو اس کے بارے میں بھی پریشان ہونے کی کوئی ضرورت نہیں ہے ۔ مکھی بھی اب نمبر دو ہے ۔ ایک ابال دے کر پی لیا کرو۔۔

    ReplyDelete
  5. مکھی اگر دودھ میں مر گئی تو خیر ہے۔ حکم ہے کہ اگر مکھی کھانے میں گر جائے تو اسے اچھی طرح غوطہ دے کر باہر پھینک دیں کہ اس کے ایک پر میں بیماری اور دوسرے میں ان کی شفا ہوتی ہے۔ بھوسہ وغیرہ ویسے تو ہونا نہیں‌چاہئے لیکن مضر صحت نہیں ہے۔

    ReplyDelete
  6. زیادہ پریشان نہ ہوں ورنہ مشکل مین پڑ جائیں گے !
    میں ایک آسان حل بتاتا ہوں جیسا کہ نبی صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا کہ مکھی کے ایک پر میں بیماری ہے اور دوسرے میں شفاء تو جب مکھی کسی چیز میں گرے تو اسے ڈوبا کر نکال دو،رہی کچرے وغیرہ کی بات تو چھن جانے اور مکمل ابل جانے کے بعد بقیہ جراثیم بھی ختم ہی سمجھیئے سائنسدانون کے مطابق ،اب دودھ پینے کے قابل ہے کیا سمجھے:)

    ReplyDelete